دنیا

گِٹار: عمر مختار

آواز و شاعری: شان رضوی

سنہ: ۲۰۰۸

دنیا دکھنے لگی ہے،

رنگیں تھی نہ کبھی،

رنگیں تھی خیال میں،

تھی کچھ سراب سی۔۔

کیا ناکامی، کیا مایوسی،

زندگی آس ہے۔۔

اٗڑ نہ پاؤ، چوٹ کھاؤ،

رہ گزر دو قدم ہی۔۔

یہ پل آتا ہے جیون میں،

سب کے کوئی کیا کرے،

بچپن کے وہ رنگ معسوم،

لِپٹے ہیں پتنگ سے۔۔

کیا ناکامی کیا مایوسی،

زندگی آس ہے۔۔

اٗڑ نہ پاؤ، چوٹ کھاؤ،

رہ گزر دو قدم ہی۔۔

  1. Dude!! I can’t believe this. Where the hell did you pull this melody out man. This brings back so many memories.
    Very nice written!!

Leave a Reply